نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم خصوصی طیارے سے وطن روانہ

نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم خصوصی طیارے سے وطن روانہ
Spread the love

راولپنڈی: نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کو سخت سیکیورٹی میں اسلام آباد انٹرنیشنل ائیرپورٹ سے دبئی روانہ کردیا گیا۔
نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کو اور دیگر آفیشلز سمیت 34 افراد خصوصی پرواز کے ذریعے وطن واپسی کے لیے دبئی روانہ ہوگئے ہیں۔ نیوزی لینڈ ٹیم کے لیے مختص خصوصی طیارہ تاخیر سے اسلام آباد پہنچا جس کی وجہ سے پرواز کی روانگی میں دیر ہوئی۔

نیوزی لینڈ کی ٹیم کو پاکستان کرکٹ ٹیم کے ساتھ 3 ون ڈے اور 5 ٹی 20 میچز کی سیریز کھیلنی تھی، جس کو نیوزی لینڈ کی حکومت نے سیکیورٹی خدشات کا بہانہ بنا کر منسوخ کیا اور ٹیم کو فوری وطن واپسی کا حکم دیا تھا۔

نیوزی لینڈ کی ٹیم 11 ستمبر کو اسلام آباد پہنچی تھی، پہلی ون ڈے سیریز راولپنڈی کرکٹ اسٹیڈیم میں 21 ستمبر تک کھیلی جانی تھی، تاہم پہلے ون ڈے سے کچھ دیر قبل کرکٹ سیریز کو منسوخ کیا گیا، جس نے پاکستان سمیت دنیابھر کے کرکٹ شائقین کو حیرت میں مبتلا کردیا۔
وطن واپسی سے قبل نیوزی لینڈ کی ٹیم کو اسلام آباد کے مقامی ہوٹل سے انتہائی سخت سیکیورٹی میں اسلام آباد ائیرپورٹ پہنچایا گیا جہاں محکمہ صحت کے حکام نے دبئی جانے والے مسافروں کے لیے ایس او پیز پر عمل درآمد کرتے ہوئے تمام کھلاڑیوں اور دیگر آفیشلز کے ریپیڈ ٹیسٹ مکمل کیے۔

نیوزی لینڈ کی ٹیم کی وطن واپسی کے لیے نجی کمپنی کے ائیربس جہاز 319 کی خدمات حاصل کی گئی، 50 نشستوں پر مشتمل جہاز غیر ملکی کمپنی روٹانا جیٹ کی ملکیت ہے، اس سے قبل نیوزی لینڈ کی حکومت نے پاکستان سول ایوی ایشن اتھارٹی سے خصوصی چارٹر طیارے کے لینڈنگ رائٹس طلب کیے تھے۔

سول ایوی ایشن اتھارٹی نے کھلاڑیوں کی بہ حفاظت واپسی کے لیے خصوصی طیارے کو پاکستان میں داخل ہونے کی اجازت دی تھی۔

واضح رہے کہ نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کو پاکستان آمد کے بعد سے سربراہان مملکت کی سطح کی سیکورٹی دی جارہی ہے، اس کے باوجود اس نے دورہ پاکستان اچانک ختم کردیا اور ایک بھی میچ کھیلے بغیر واپس روانہ ہوگئی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں